ایران میں خاتون کی ہلاکت پر مظاہرہ کرنے والوں کے خلاف ایرانی سکیورٹی فورسز کاکریک ڈاؤن: یورپی یونین کا ایران پر پابندی لگانے کا فیصلہ

188

ایران میں زیرحراست خاتون کی ہلاکت پر مظاہرہ کرنے والوں کے خلاف ایرانی سکیورٹی فورسز کےکریک ڈاؤن پر یورپی یونین نے ایران پر پابندی لگانے کا فیصلہ کرلیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق یورپی یونین کے سفارت کاروں کا کہنا ہے کہ ایرانی سکیورٹی فورسز کی جانب سے کریک ڈاؤن کے خلاف ایران پر پابندیوں کے لیے یورپی یونین ممالک میں اتفاق ہوگیا ہے۔

یورپی یونین میں شامل ممالک کے وزرائے خارجہ اگلے پیر کو ایران پر پابندیاں عائد کریں گے۔

واضح رہے کہ ایران میں زیرحراست خاتون کی ہلاکت کے خلاف مظاہرے 25 روز سے جاری ہیں، ایرانی انسانی حقوق گروپ کے مطابق مظاہرین کے خلاف ایرانی سکیورٹی فورسز کےکریک ڈاؤن میں 180 سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

آیت اللہ خامنہ ای نے حالیہ فسادات کا ذمہ دار امریکا اور اسرائیل کو قرار دے دیا

ایران میں اسکارف پہننے کے قانون کی خلاف ورزی پر 13ستمبر کو گرفتار ہونے والی 22سالہ مہسا امینی تین روز بعد پولیس کی حراست میں مبینہ طور پر دل کا دورہ پڑنے سے انتقال کر گئی تھی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.