کمشنر لاہور کا محکموں کے منشیات کا شکار افراد کے ریکارڈ سافٹ ویئرز کیلئے جوائنٹ سافٹ ویئر بنانے کا حکم

442

لاہور:کمشنر لاہور چوہدری محمد علی رندھاوا نے کہا ہے کہ سرکاری اور نجی سکولز ہمارے ہیں اور ان میں زیر تعلیم بچے بھی ہمارے ہیں۔

کمشنر لاہور نے کہا کہ سکولوں اور کالجوں میں اسمبلیز کو باقاعدہ بنائیں۔موثر آگاہی دی جائے۔ کمشنر لاہور نے محکموں کے منشیات کا شکار افراد کے علیحدہ علیحدہ ریکارڈ سافٹ ویئرز پر مشتمل جوائنٹ سافٹ ویئر بنانے کا حکم دیا تاکہ تمام افراد کا ٹریکنگ سسٹم تشکیل دیا جاسکے۔

کمشنر لاہور نے محکمہ ہیلتھ کے نیوٹریشن افسران کو فوری طورپر سکولوں میں تعینات کرنے کی ہدایت کردی۔ کمشنر لاہور نے اے این ایف کو ہاٹ سپاٹس ڈیٹا مرتب کرکے پیش کرنے کی بھی ہدایت کردی۔ کمشنر لاہور نے حکم دیا کہ ایکسائز انسپکٹرز اور پولیس افسران کی مشترکہ ٹیمیں تعلیمی اداروں کے گرد بھرپور چیکنگ کریں۔

کمشنر لاہور نے کہا کہ پنجاب فوڈ اتھارٹی افسران تمام تعلیمی اداروں کی کنٹینز اور ورکرز کی سکریننگ کریں۔ پلاننگ کا اہم حصہ سپلائی چین کو توڑنا ہے اس پر ادارے کام کر رہے ہیں۔ لاہور سمیت تمام اضلاع میں سکولوں کالجوں میں کاونٹرز بناکر آگاہی ڈیٹرنس قائم کیا جائے۔کمشنر لاہور نے کہا کہ سکولوں، کالجوں کے اکیڈمک سٹاف، طلبا اور نان ٹیچنگ سٹاف کی پروفائلنگ مکمل کی جائے۔جس پر محکمے کام کررہے ہیں۔ کمشنر لاہور چوہدری محمد علی رندھاوا کی زیر صدارت انسداد نشہ کے حوالے سے اہم آج اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں اے این ایف، اے سی ایس ہوم آفس افسران، ہائیر ایجوکیشن، سکول ایجوکیشن، ایکسائز، ہیلتھ اورپولیس افسران نے شرکت کی۔٭٭

کمشنر لاہور چوہدری محمد علی رندھاوا کے شہر کے مختلف علاقوں کے دورے
کمشنر لاہور چوہدری محمد علی رندھاوا نے شہر کے مختلف علاقوں کے دورے کیے۔ کمشنر لاہور نے لاری اڈا بادامی باغ، نوازشریف ہسپتال یکی گیٹ اور زیر تعمیر کمشنر آفس دیو سماج روڈ کا دورہ کیا۔ کمشنر لاہور کو دورہ کے دوران ایڈمنسٹریٹر لاری اڈا نے صفائی، سکیورٹی اور مجوزہ پارکنگ منصوبہ کے بارے بریفنگ دی۔

کمشنر لاہور چوہدری محمد علی رندھاوا نے نوازشریف ٹیچنگ ہسپتال کے وارڈز، لیبز، ایمرجنسی اور سٹورز کا دورہ کیا اور ادویات دستیابی و فراہمی کے ریکارڈ کو چیک کیا۔ کمشنر لاہور نے ایمرجنسی میں موجود مریضوں سے علاج معالجہ کی سہولیات فراہمی بارے بات چیت کی۔

اس موقع پر کمشنر لاہور نے کہا کہ تحصیل ہسپتالوں کا مکمل فعال ہونا ٹیچنگ ہسپتالوں پر دباو کو کم کرتا ہے۔ کمشنر لاہور نے استقبالی کاونٹر پر مریضوں کے ریکارڈ رجسٹریشن کو چیک کیا۔ کمشنر لاہور نے کہا کہ ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف کو ڈیوٹی روسٹرز کے مطابق حاضر ہونا چاہئے۔

کمشنر لاہور نے خصوصی طور پر ٹیسٹنگ لیب کا دورہ کیا اور مفت ٹیسٹوں کی تفصیلات معلوم کیں۔ کمشنر لاہور نے کہا کہ ہسپتال مختلف بیماریوں، ویکسین شیڈول سے متعلقہ آگاہی مواد استقبالی کاونٹرز سے شہریوں کو دیں۔ کمشنرلاہور نے کہا کہ ہسپتالوں میں نائٹ شفٹ کو سرپرائز وزٹس کے ذریعے چیک کیا جائیگا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.