پنجاب ٹرانسپورٹ کمپنی نے قوانین کی خلاف کرنے والی پبلک ٹرانسپورٹ کو52 لاکھ 89 ہزار کے چالان ٹکٹ جاری کردیے

281

لاہور: پنجاب ٹرانسپورٹ کمپنی کے انفورسمنٹ ونگ نے مارچ کے مہینہ میں  قوانین کی خلاف کرنے والی 16 ہزار 3 سو سے زائد متفرق پبلک ٹرانسپورٹ کو  52 لاکھ 89 ہزار کے چالان ٹکٹ جاری کئے۔

تفصیلات کے مطابق سب سے زیادہ چالان 10501 غیر قانونی موٹرسائیکل رکشہ کے خلاف کارروائی عمل میں لائی گئی اور اس مد میں 21 لاکھ روپے کے جرمانے کیے گئے۔ سموگ سے بچاؤ کے لیے دھواں دینے والی 3628 سے زائد گاڑیوں کو 9 لاکھ 38 ہزار کے چالان کئے گئے۔ اسی طرح 1856 سے زائد بغیر روٹ پرمٹ گاڑیوں کے خلاف آپریشن کیا گیا۔247 بسوں کو  1 لاکھ 24 ہزار کے جرمانے کیے گئے، متفرق روٹس پر چلنے والی 1,091 ویگنوں کو  5 لاکھ 45 ہزار کے جرمانے کیے گئے، 748 کوسٹر مزدا کو  3 لاکھ 74 ہزار کے جرمانے جبکہ 4 سٹوک 3186 رکشوں کے خلاف 15 لاکھ 93 ہزار کی کارروائی عمل میں لائی گئی اور 535 دوسری مختلف قسم کی گاڑیوں کو چالان ٹکٹ جاری کئے گئے۔

اس موقع پر چیف ایگزیکٹو آفیسر پنجاب ٹرانسپورٹ کمپنی خواجہ سکندر ذیشان نے کہا کہ چالانوں کا مقصد عوام کی فلاح کے لئے ٹرانسپورٹر حضرات کو پابند کرنا ہے کہ وہ عوام کو بہترین اور محفوظ سفری سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنائیں اور قانون کی پاسداری کریں۔ انہوں نے کہا کہ قوانین پر عمل پیرا ہو کر ہی مہذب معاشرے کی تشکیل ممکن ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پنجاب ٹرانسپورٹ کمپنی جلد ہی شہریوں کو بہترین بین الاقو امی معیار کی سفری سہولیات کی خاطر ماحول دوست بسیں چلائے گی جس کے لئے مختلف شہروں میں فزیبلٹی رپورٹ پر کام جاری ہے۔ اس رپورٹ کے بعد ماحول دوست بس سروس کو لاہور سمیت پنجاب کے مختلف شہروں میں چلایا جائے گا۔

ڈپٹی جنرل مینجر انفورسمنٹ فیصل یوسف نے کہا کہ پی ٹی سی کے انفورسمنٹ ونگ کے ٹرانسپورٹ انفورسمنٹ افسران تعداد میں محدود ہونے کے باوجود بہترین کارکردگی دکھا رہے ہیں اورآئندہ بھی انفورسمنٹ ونگ کے جوان اپنی کارکردگی کو اسی طرح جاری رکھتے ہوئے عوام کو محفوظ سفری سہولیات کی فراہمی کو یقینی بناتے رہیں گے

Leave A Reply

Your email address will not be published.