نائلہ کیانی اور ثمینہ بیگ نے نانگا پربت چوٹی سرکرنے والی پہلی پاکستانی خواتین ہونے کا اعزاز حاصل کرلیا

541

اسلام آباد۔(اے پی پی):نائلہ کیانی اور ثمینہ بیگ نے اتوار کو آٹھ ہزار ایک سو پچیس میٹر بلند نانگا پربت چوٹی سرکرنے والی پہلی پاکستانی خواتین ہونے کا اعزاز حاصل کرلیا ہے۔الپائن کلب آف پاکستان کے سیکرٹری کرار حیدری نے اتوار کو ’’اے پی پی ‘‘ کو بتایا کہ نائلہ کیانی نے صبح دس بجکر اٹھارہ منٹ پر نانگا پربت سر کی ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ وہ ابتک آٹھ ہزار میٹر بلند سات چوٹیاں سر کر چکی ہیں اور انہوں نے خود کو ایک باصلاحیت کوہ پیما خاتون کے طور پر منوایا ہے ، اس سے قبل نائلہ کیانی نے مائونٹ ایورسٹ ، کے ٹو سمیت آٹھ ہزار میٹر بلند سات چوٹیاں سر کی ہیں اور دنیا بھر کے کوہ پیما نائلہ کیانی کے غیر متزلزل عزم کے معترف ہیں ۔

نائلہ کیانی کے بعد ثمینہ بیگ نے اپنے ہم وطن کوہ پیمارضوان داد کے ساتھ صبح گیارہ بجکر آٹھ منٹ پر نانگا پربت سر کی ۔ ان کے علاوہ دیگر آٹھ کوہ پیمائوں نے بھی اس چوٹی کو سر کیا جن میں عید محمد ، احمد بیگ ، وقار علی ، سعید کریم ، لیاقت کریم ، شاہ دولت شامل ہیں ۔انہوں نے کہاکہ نوجوان کوہ پیما وجیداللہ نگری نے بھی دنیا کی نویں بلند ترین چوٹی نانگا پربت پر پاکستانی پرچم لہرایا۔غیر ملکی کوہ پیما ان کے بعد نا نگا پربت پر پہنچے ۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.